woman in white crew neck t shirt holding white ceramic mug

Why morning tea is dangerous or useful for health

نہارمنہ چائے، صحت کیلئےنہائت خطرناک!

بعض لوگ نہارمنہ چائے پینےیا ’ بیڈ ٹی‘ کے عادی ہوتے ہیں۔ماہرین نےنہار منہ چائے یا بیڈ ٹی کوصحت کیخلاف بڑا خطرہ قرار دے دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ماہرینِ صحت کا کہناہے کہ نہار منہ چائے پینا خود کو خطرے میں دھکیلنے کے مترادف ہے۔

یہ بات قابل غور ہے کہ چائے کے جہاں فوائد ہیں تو دوسری جانب نقصانات بھی ہیں جن کا انحصار اس کے استعمال کے وقت پر ہوتا ہے۔

mother using laptop while cute little girl playing on bed at home
bed tea

نہار منہ چائے پینا صحت کیلئے انتہائی خطرناک ہےکیونکہ اس سے تیزابیت سمیت متعدد مسئال جنم لیتے ہیں۔ نہار منہ چائےپینا پیٹ کی متعدد بیماریوں کودعوت دینا ہے، چاہے وہ سبز چائے ہی کیوں نہ ہوصحت کے لیے مضر ہے۔

اگر ناشتہ کرنے سے پہلےہی چئے پی لی جائے تو اس سے معدے کی تیزابیت بڑھ جاتی ہے جو سینے میں جلن بدہضمی اور ڈکار آنے کی وجوہات بنتی ہے۔ ایسے افراد جو کو صبح سویرے چائے پینے کی عادت ہے انہیں چاہیے کہ وہ پہلے ٹھوس غذائیں کھالیا کریں ۔

ماہرین صحت کہتے ہیـں کہ اکثرلوگ اپنی صبح کا آغاز ایک کپ چائے کے ساتھ کرنے کے عادی ہوتے ہیں جو کہ بے حد موزی عمل ہے۔

دوسری جانب چائے میں موجود ایک کیمیکل Theophylline غذا کے ہضم ہونے کے عمل کے دوران ڈی ہائیڈریشن کا باعث بن سکتا ہے جو کہ قبض کا شکار بنا دیتا ہے۔ ویسے تو چائے کو آنتوں کی حرکت یا قبض سے بچاﺅ کے لیے فائدہ مند بھی مانا جاتا ہے مگر اس کی زیادہ مقدار استعمال قبض کا شکار بنانے کے لیے کافی ہوتا ہے۔

کیفین کو مزاج پر اثر انداز ہونے والی مقبول ڈرگ بھی مانا جاتا ہے جو مثبت کے ساتھ جسم پر منفی اثرات بھی مرتب کرسکتی ہے، بہت زیادہ چائے پینا نیند کی کمی، ذہنی بے چینی اور دل کی دھڑکن کی رفتار بڑھانے کا خطرہ بڑھاتا ہے اور چینی کی مفدار شوگر کو بھی دعوت دیتی ہے۔

چائے میں موجود کیفین خون کی شریانوں کے نظام کے لیے کچھ زیادہ اچھی نہیں ہوتی اور اسے بہت زیادہ مقدار میں جسم کا حصہ بنانا دل کے امراض کا باعث بن سکتا ہے۔

About the author: Shah Mahar

No Gain Without Pain
I am a Muslim and Love Muhammad

Comments

No comments yet